“روشنی کا سفر “۔ تحریر ،،ابو بلال حیدر
منزلوں کی بات چھوڑو کس نے پائی ہیں منزلیں
ایک سفر اچھا لگا ،،،،،کچھ ہم سفر اچھے لگے
چوآ فرنٹ گروپ کے قیام ،نوجوانوں کی دلچسپی اور اس مشن میں بڑھ چڑھ کر حصہ لینا
نوجوان نسل کا تمام سیاسی وابستگیوں کو بالائے طاق رکھ کر ایک پلیٹ فارم پر اکٹھا ہونا
سماجی حلقوں کی جانب سے اس کاوش کو سراہا جانا
پڑھے لکھے اور باشعور احباب کی جانب سے سرپرستی
شہر کی معتبر شخصیات کا گوناگوں مصروفیات کے باوجود مالی معاملات کو سنبھالنے کے لیے اپنی خدمات پیش کرنا
پھر عملی اقدام کرتے ہوئے بہترین فری میڈیکل کیمپ کا انعقاد ،،،اور اس میں مدد کرنے والے احباب اور اسپتال عملہ کی حوصلہ افزائی اور شکریہ کے لیے دعوت کا اہتمام
ضرورت مندوں اور مستحق بچوں کے لیے کپڑوں کی فراہمی
ہفتہ صفائی کی مہم کا اعلان آگاہی اور متعلقہ محکموں کی جانب سے بھرپور تعاون کا اعلان
شہر میں امن و امان کی صورتحال پر تشویش کا اظہار اور بھرپور احتجاج
بلڈ بنک کا قیام اور اس کا طریقہ کار وضع کرنا
مقتدر حضرات کا اپنی محفلوں میں آپ نوجوانوں کا برملا ذکر کرنا
مقامی صحافی بھائیوں کی جانب سے بھرپور تعاون اور کوریج
ہمارے جوانوں اور بزرگوں کا سر جوڑ کر بیٹھنا اور مختلف کاموں سے متعلق کمیٹیاں بنانا اس بات کی دلیل ہے کہ ہمارے شہر کی باشعور کمیونٹی اس شہر کی بہتری کے لیے پرعزم ہے
اور پھر صفائی مہم اور کچرے کو ٹھکانے لگانے کے لیے زیشان بھائی اور ایاز بھائی کی بھرپور کوششیں جیسے کہ ڈی جی سیمنٹ فیکٹری میں انتظامیہ سے ملاقات اور پلانٹ کا وزٹ اور معلومات حاصل کرنا اور کمپنی انتظامیہ کی جانب سے بھرپور تعاون کی یقین دہانی از حد اطمینان بخش ہے نیز اس دوران شہر کی نوجوان نسل کا مختلف اہم معاملات میں دو ٹوک اور انتباہی موقف اپنانا یقیناً ایک بڑی تبدیلی کا اشارہ ہے
ان مندرجہ بالا تمام حالات و واقعات کو مدنظر رکھتے ہوئے فقیر اس نتیجہ پر پہنچا ہوں کہ اس شہر کی بہتری اور فلاح انسانیت کے لیے اقتدار یا اختیارات کا ہونا اتنا ضروری نہیں ہے جتنا خلوص نیت ،مصم ارادے اور کچھ کر گزرنے کی سوچ کا ہونا انتہائی ضروری ہے
یعنی اگر کچھ کر گزرنے کا ارادہ ہو تو یہ چھوٹی موٹی رکاوٹیں کوئی معنی نہیں رکھتیں
اس مشن میں شامل بزرگوں ،نوجوانوں اور بھائیوں کی خدمت میں التماس ہے کہ آپ سب لوگ اپنے جائز حقوق کے حصول والے مشن پر عازم سفر ہیں ہر قسم کی مصلحت کو بالائے طاق رکھتے ہوئے اس عظیم مقصد پر ثابت قدم رہیں انشااللہ ایک اچھا مستقبل ہم سب کا مقدر ضرور بنے گا آپ کوشش جاری رکھیں اور نتیجہ من جانب اللہ ہے کیونکہ اعمال کا دارومدار نیتوں پر ہے آگے بڑھو اور اپنے آپ کو بدل کر دکھا دو زمانہ خود بخود بدل جائے گا اللہ تعالی آپ سب کا حامی و ناصر ہو ،،،،آمین
کون ابھرتے ہوئے سورج کا رستہ روکے
روشنی کو ہر صورت سوئے منزل کو جانا ہے